Difference between Halal and Haram || حلال اور حرام میں فرق

نماز فجر کی نماز  باجماعت کے بعد جیسے ہی حضور اکرم صلی اللہ علیہ والہ وسلم سلام پھیرتے، آپ کے ایک صحابی ابو دجانہ رضی اللہ تعالی عنہ فورا سے اٹھ کر گھر چلے جاتے جبکہ باقی صحابہ بیٹھے رہتے۔ جب تواتر سے ایسا ہوا تو کچھ صحابہ نے حضورؐ کی توجہ اس طرف دلائی ۔اگلے روز جب آپؐ نے سلام پھیرا، ابو دجانہ اٹھ کر جانے لگے تو حضورؐ نے آواز دی۔ لبیک یا رسول اللہ صلی اللہ علیہ والہ وسلم حضور نے معاملہ دریافت فرمایا تو ابو دجانہ عرض کرتے ہیں کہ اللہ کے نبیؐ کھجور کی فصل پک گئی ہے۔ میرے ہمسایوں کے گھر کھجور کے درخت کی کچھ شاخیں میرے صحن میں آتی ہیں ۔رات میں کچھ کھجوریں ہمارے صحن میں گر جاتی ہیں۔ میں نماز پڑھ کے فورا اس لیے چلا جاتا ہوں کہ بچوں کے جاگنے سے پہلے وہ گری ہوئی کھجوریں اٹھا کر ہمسایوں کے صحن میں رکھ دوں تاکہ لاعلمی کی وجہ سے میرے بچے وہ مال نہ کھا لیں جو ان پر جائز نہیں۔

 حضورؐ نے فرمایا تمہیں مبارک ہو ابو دجانہ اللہ نے تمہارے لیے جنت کی بشارت دی ہے۔ سبحان اللہ

اللہ تعالیٰ ہم سب کو رزق حلال کمانے اور کھانے کی توفیق عطافرمائے۔

Leave a Comment